Press Release

Maulana Mahmood Madani has strongly condemned use of bulldozers in Jamia Ashrafia Mubarakpur


 
جامعہ اشرفیہ مبارک پور پر بلڈوزر حملہ کی سخت الفاظ میں مذمت

نئی دہلی:27/اپریل2022

 جامعہ اشرفیہ مبارک پور میں قانونی طور طریقوں کو نظر انداز کرتے ہوئے جس طرح منفی سوچ کے ساتھ بلڈوزر کا استعمال کیا گیا ہے، اس پر تشویش کا اظہارکرتے ہوئے جمعیۃ علماء ہند کے صدرمولا نامحمود اسعد مدنی نے سخت الفاظ میں مذمت کی ہے۔ مولانا مدنی نے کہا کہ سرکار ملک میں قانون اوراس سے متعلق ضابطوں کی بالادستی قائم کرے اور ایک مخصوص کمیونٹی کونشانہ بنانے کی کوشش نہ کرے۔انھوں نے کہا کہ جیسا کہ معلوم ہوا ہے کہ جس حصے پر بلڈوزر چلانے کی کوشش کی گئی،اس کا قضیہ مقامی عدالت میں زیر سماعت ہے، نیز اس کے انہدام سے متعلق کسی طرح کا نوٹس نہیں دیا گیا اورادارے کے زیادہ تر ذمہ داران رمضان و عید کی وجہ سے موجود بھی نہیں ہیں، تو اس کے باوجود انہدامی کاروائی کاعمل میں لانا کسی بھی آئینی و جمہوری حکومت کا کام نہیں ہوسکتا، بلکہ یہ آمریت پر مبنی عمل کہلائے گا جو ہندستان جیسے عظیم جمہوریت میں ہرگز منظور نہیں ہے۔ مولا نامد نی نے اس موقع پر کہا کہ جمعیۃ علماء ہند انصاف و قانون کے معاملے میں جا معہ اشرفیہ کے ساتھ ہے اور حسب ضرورت قانونی امداد کرنے کو تیار ہے۔

مولانا مدنی جو ان دنوں مسجد رشید دیوبند میں اعتکاف میں ہیں، انھوں نے ملک کی فلاح و بہبود اور امت مسلمہ کی خیرخواہی کے لیے باری تعالی کے حضور میں دعا کی ہے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
مدیر محترم، آداب و تسلیمات!
اس پریس ریلیز کو شائع فرماکر شکر گزار کریں

نیاز احمد فاروقی سکریٹری جمعیۃ علماء ہند 

 

While expressing concern over the use of bulldozers in Jamia Ashrafia Mubarakpur, without due legal procedures, the President of Jamiat Ulema-i-Hind, Maulana Mahmood Asad Madani has strongly condemned it and urged the govt to not let the particular community feel harassed.

 

जमीयत उलेमा-ए-हिंद के अध्यक्ष मौलाना महमूद असद मदनी ने कानूनी प्रक्रियाओं की अनदेखी करते हुए जामिया अशरफिया मुबारकपुर में बुलडोजर के इस्तेमाल पर चिंता जताते हुए इसकी कड़ी निंदा की है.

April 27, 2022